اہل کوکن ترقی کی راہ پر مضبوط ارادوں کے ساتھ

اہل کوکن ترقی کی راہ پر مضبوط ارادوں کے ساتھ

ہمیشہ اپنے اطراف کا مشاہدہ کرنا چاہیے اور خصوصی توجہ دینا چاہیے کہ کون سا اقدام کیا جائے ، جس سے ہم اپنی اور اپنے اطراف کے افراد کی زندگی بہتر بنا سکتے ہیں ۔
ہمیں  زندگی میں کچھ چیزوں کا جاننا ضروری اور دلچسپ ہوگا ۔ کسی جدت کی ابتداء کرنی ہوگی، تاکہ ہماری آنے والی نسل ہماری اس کوشش کا فائدہ اٹھا سکے ۔ کوکنی کمیونٹی مہاراشٹر کے ساحلی علاقے سے تعلق رکھتی ہے۔ اسلام ہمیںحصول روزگارکے حلال ذرائع کے طور پر تجارت کرنے کے لیے حوصلہ افزائی کرتا ہے اور لوگوں کی صلاحیت کو سختی کے ساتھ سمجھنے اور ابھارنے کی ہدایت دیتا ہے۔
اس کمیونٹی کی ترقی کو یقینی بنانے کےلیے مقامی اور عالمی سطح پر کام کرنے اور آج کی اقتصادی اور انتظامی ضرورت کو پورا کرنے کے لیےمنظم ( تشکیل شدہ فارم) میں رکھنا ہوگا۔ جب کوئی نئے سرے سے تجارت یاکاروبا شروع کرنا چاہتا ہے،اکثر اس کے پاس صحیح معلومات، سرمایہ یا تجربہ نہیں ہوتا ۔ایسے لوگوں کی مدد کے لیے یہ ضروری ہے کہ اس پلیٹ فارم کی تشکیل کی جائے۔،جہاں سے ہم اپنے لوگوں کی ترقی اور کامیابی کے لیے کمیونٹی کے اندر کاروبار اور کاروباری سرگرمیوں کی حوصلہ افزائی کر سکیں ۔ اب اس طرح کے پلیٹ فارم کو تشکیل دینے کا وقت ہے جو کوکنی کمیونٹی اور کوکن کے علاقے کو اقتصادی سطح پر کامیابی اور ترقی کی راہ پر گامزن کر سکیں ۔یہ قیمتی جملے ممبئی کے ہوٹل تاج میں منعقد ایک مٹینگ کے دوران کہے گئے ۔
گزشتہ دنوں اس موضوع تنادلۂ خیال کے لیے ممبئی کے تاج ہوٹل میں جناب اقبال وانو( کویت سے معزز این آر آئی) جناب انتخاب چوگلے (سابق بینکر اور فی الحال ماہر تجارت ) نے منعقد کیا۔ اس پروگرام میں ڈاکٹر ظہیر قاضی( انجمن اسلام کے صدر)،جناب حبیب فقیی ( مہاراشٹرا وقف بورڈ کے ممبر)، سفیان وانو(ممتاز اور محنت کش سیاّس)، ڈاکٹر سراج چوگلے( پرنسپل مہاراشٹرکالج)، ڈاکٹر نومان تنگیکر( کالسیکر ہسپتال کے سی ای او)، پرویز فرید( امید فاؤنڈیشن کے بانی)، منظور ناڈکر( سماجی کارکن) اشفاق واگلے( انڈس لینڈ بینک کے آئی ٹی ہیڈ)، لبیب فقیی( کویت سے این آر آئی)، اور آصف دادن( کوکن مرکنٹائل بینک کے ڈائریکٹر) جیسی ممتاز شخصیتوں نے شرکت کر کے تبادلۂ خیال کیا ۔
یہ نشست وبحث اہل کوکن کی اقتصادی و معاشی خود مختاری کی طرف مثبت قدم ہے۔ اس موقع پر کئی مختلف موضوعات پر غورو خوض کیا گیا۔مثلاً یہ مثبت اقدام ایک بہترین کوشش ہے اور اس سے کمیونٹی کے با اثر افراد وابستہ ہوسکتے ہیں، جو سماجیسطح پر بہت زیادہ کام کر رہے ہیں اور کمیونٹی کے مفاد کے لیے اپنے تجربات کا استعمال کرتے ہیں۔ یہ نتیجہ اخذ کیا گیاکہ اب اقتصادیت کو فروغ دینے کا وقت آگیا ہے۔ اس بات پر اتفاق کیا گیا کہ ہمیں اس پر فوری طور پر درج ذیل اقدامات کرنے چاہیے۔
۔ کوکن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز کی تشکیل( یہ ایک سیکشن 25 کمپنی ہوگی” جو کمیونٹی کے افراد کے کاروباری اور نیٹ ورکنگ کے ذریعے تجارت کو فروغ دینے کا کام کرےگی)۔
۔ گلوبل کوکنی اکنامکس ویلفیئر فارم کی تشکیل( دنیا بھر میں بسے اہل کوکن کے ساتھ ایک گلوبل( عالمی تنظیم، جو کوکن کےخطے میں کمیونٹی کی فلاح و بہبودی کے لیے کام کرے گی)
۔اسلامی فائنینس فور کوکنی کمیونٹی کی تشکیل( کمیونٹی کے اراکین کو صفرفی صد سود( غیر سودی) قرض مہیا کرے گی)
انشاءاللہ اس سے حاصل ہونےوالے بہتر نتائج کو دنیا دیکھی گی۔

Please follow and like us:
0

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Facebook Auto Publish Powered By : XYZScripts.com